سلسلہ ہائے سفر / Silsila Haye Safar 1 Reviews

By: Muneera Qureshi

Hardcopy Price

PK Flag
PKR 800
INR Flag
INR 600
USD Flag
USD 30

E-book Price

PK Flag
PKR 300
INR Flag
INR 300
USD Flag
USD 3

بیرونی ممالک کی سیر کی داستان! دل چسپ اور پر لطف انداز میں لکھا گیا ایک ایسا منفرد سفرنامہ جس میں مختلف اقوام، ان کے تہذیب وتمدن، رہن سہن اور مقامات کو دل کش پیرائے میں پیش کیا گیا ہے، جو آپ کے اندر کے مسافر کو سفر پر اکسائے گا۔

ISBN (Digital)
ISBN (Hard copy) 978-969-696-498-8
Total Pages 563
Language Urdu
Estimated Reading Time 5 hours
Genre Travelogue
Published By Daastan
Published On 13 Jul 2022
No videos available
Muneera Qureshi

Muneera Qureshi

منیرہ قریشی ایک ایسی شاعرہ ہیں جنھیں جذبوں کو لفظوں میں ڈھالنے میں کمال حاصل ہے۔  جب نثر لکھتی ہیں تو الفاظ خود بہ خود جڑ کر منظر کشی کا ایک سماں باندھ دیتے ہیں۔ وہ جذبوں کو بیان کرنے کے لیے الفاظ کا سنبھل سنبھل کر چناؤ کرتی ہیں اور صفحۂ قرطاس پر اتار کر انھیں اَمر کردیتی ہیں۔

Reviews


Sep 01, 2022

کتاب کا نام: سلسلہ ہائے سفر
مصنفہ: منیرہ قریشی
صفحات: 550
ریٹنگ: 5/⭐⭐⭐⭐
______________
______________

دوسرے ممالک اور ان کے تہذیب و تمدن کے بارے جاننا میرا پسندیدہ مشغلہ ہے۔ اللّٰہ نے انسان کو تصور کی نعمت سے نوازا ہے اس لیے میں جب کوئی سفر نامہ پڑھتی ہوں تو خود کو اسی ملک میں گم کر لیتی ہوں۔
منیرہ قریشی ایک قابل استانی ہونے کے ساتھ ساتھ ایک قابل مصنفہ بھی ہیں۔ زیر نظر تبصرہ ان کے ایک خوبصورت سفر ناموں کے مجموعے "سلسلہ ہائے سفر" پر ہے۔
✨مصنفہ نے سفر نامے کا اغار اپنے سفر حج سے کیا ہے۔ حج جیسے خوبصورت اور دلفریب فریضے کو انھوں نے اس خوش اسلوبی سے درج کیا ہے کہ میں نے تصور ہی تصور میں کبھی خود کو مدینے کی گلیوں میں پایا تو کبھی کعبے کو اپنی آنکھوں کے سامنے۔
✨دوسرا سفر نامہ ملائیشیا کے بارے میں تھا۔ مالے قوم کے اخلاق اور اطوار پڑھ کر میرا دل بہت خوش ہوا خصوصاً وہاں کے تعلیمی نظام نے مجھے غیر معمولی طور پر متاثر کیا۔ اب بس میرا دل چاہ رہا ہے کہ مستقبل میں کسی نہ کسی طرح وہاں کی اسلامک یونیورسٹی میں داخلہ لے لوں اور ایم فل کی ڈگری وہی سے حاصل کروں۔ ????
✨تیسرا سفرنامہ تھائی لینڈ کے متعلق تھا۔ اس چھوٹے سے ملک کے بارے میں پڑھ کر بہت اچھا لگا اور وہاں رہنے والے لوگوں کے بارے میں بھی جان کر اچھا لگا جو اپنے ملک کی ترقی کے لیے کوشاں ہیں۔
✨چوتھا سفر نامہ یو-کے کے عنوان سے تھا۔ اس سفر نامے میں یورپ اور مانچسٹر کے تاریخی مقامات کے ساتھ ساتھ کیمبرج یونیورسٹی کا تفصیلی ذکر موجود ہے جس نے میرے علم میں خاطر خواہ اضافہ کیا۔
✨ پانچوایں اور اخری سفر جو اس کتاب میں درج ہے وہ جدید ترکیہ کا سفر ہے۔ ترک واقعی میں ایک مہذب قوم ہے جسے رجب طیب اردگان نے بدل ڈالا۔ جہاں جہاں ترکی کی ترقی کا ذکر آتا ہے وہاں طیب اردگان کا ذکر بھی سنہری الفاظ میں موجود ہوتا ہے۔ جدید ترکیہ کے بارے میں پڑھنے کے بعد میرے دل سے یہی دعا نکلتی کہ کاش ہمیں بھی کوئی ایسا مرد مجاہد مل جائے جو ہمارے ملک کو پھر سے ترقی کی راہ پر گامزن کر سکے۔

✨ مختصراً، سفر ناموں کا یہ مجموعہ میرے دل کو بہت بھایا، بہت کچھ نیا جاننے کو ملا اور انداز بیان بھی سادہ اور سہل تھا۔

Books by Same Author


Books in Same Genre